یاداشت بڑھانے کے قدرتی طریقے

بڑھتی عمر کے ساتھ ساتھ یاداشت میں کمی آنا شروع ہو جاتی ہے۔ آج کی تحریر میں ہم آپ کو یاداشت بڑھانے کے ایسے قدرتی طریقے بتائیں گے کہ جن پر عمل کر کے آپ اپنی یاداشت میں بہتری لا سکتے ہیں۔ اور آپ کو معلوم ہو جائے گا کہ یادداشت بڑھانے کا طریقہ کیا ہے اپنی یاداشت کو بہتر کیسے کریں۔ یاداشت میں اضافہ کرنے کے قدرتی طریقے کون کون سے ہیں۔

Barhti Umar ke sath sath Yaddasht mein kami aana shuru ho jati hai. Aaj ki tehreer mein hum aap ko Yaddasht badhaane ke aisay qudrati tarike bitayen ge ke jin par amal kar ke aap apni Yaddasht mein behtari laa satke hain. Aur ap ko maloom ho jaye ga ke yaddasht badhane ke gharelu nuskhe aur upay Urdu aur Hindi me kya hain.

خود سے گفتگو کرنا

یاداشت بڑھانے کا طریقہ خود سے گفتگو کرنا ہے۔ ایک جدید تحقیق سے ثابت ہوا ہے کہ جو لوگ خود کلامی کے عادی ہوتے ہیں ان میں یادداشت کی کمی کا مرض لاحق ہونے کے امکانات کم ہوتے ہیں۔ خود کو قصے سنانے کی عادت یاداشت کے نقصان کو روکتی ہے اور اس سے ہر روز کی تفصیلات یاد رکھنے میں بھی مدد ملتی ہے۔

Khud se guftagu karna

Yaddasht badhaane ka tarika khud se guftagu karna hai. Aik jadeed tahaqeeq se saabit huwa hai ke jo log khud kalami ke aadi hotay hain in mein yad dasht ki kami ka marz la-haq honay ke imkanaat kam hotay hain. Khud ko qissay sunanay ki aadat Yaddasht ke nuqsaan ko rokti hai aur is se har roz ki tafseelaat yaad rakhnay mein bhi madad millti hai.

اونچی آواز میں بولنا

اونچی آواز میں جملے بولنا کسی بھی معلومات کو ذہن میں محفوظ رکھنے کا سب سے موثر طریقہ ہے۔ یہ بات کینیڈا  میں قائم واٹرلو یونیورسٹی کی ایک تحقیق کے دوران سامنے آئی۔تحقیق کے مطابق اس کی وجہ یہ ہے کہ بولنے اور سننے سے الفاظ زیادہ ذاتی لگنے لگتے ہیں اور دماغ میں اٹک جانے کا امکان بڑھ جاتا ہے۔محققین کا کہنا تھا کہ نتائج سے تصدیق ہوتی ہے کہ پڑھنے اور یاداشت میں بہتری کے درمیان تعلق موجود ہے۔

Onche aawaz mein bolna

Onche aawaz mein jumlay bolna kisi bhi maloomat ko zehan mein mehfooz rakhnay ka sab se mo-asar tarika hai. Yeh baat Canada mein hone wali aik tahaqeeq ke douran samnay aayi. Tahaqeeq ke mutabiq is ki wajah yeh hai ke bolnay aur suneney se alfaaz ziyada zaati lagne lagtay hain aur dimagh mein atak jane ka imkaan barh jata hai. Mohqiqeen ka kehna tha ke nataij se tasdeeq hoti hai ke parhnay aur Yaddasht mein behtari ke darmain talluq mojood hai.

تحقیق کے دوران 95 افراد کا تجزیہ کیا گیا اور جاننے کی کوشش کی گئی ہے کہ خاموشی سے بڑھنے سے لوگ کتنی معلومات یاد رکھ پاتے ہیں جبکہ اونچی آواز سے الفاظ کو دہرانا کس حد تک موثر ثابت ہوتا ہے۔نتائج سے انکشاف ہوا کہ اونچی آواز میں پڑھنا لوگوں کو یاد رکھنے میں مدد دیتا ہے۔تحقیق کے نتائج جریدے جرنل میموری میں شائع ہوئے۔

Tahaqeeq ke douran 95 afraad ka tajzia kya gaya aur jan-nay ki koshish ki gayi hai ke khamoshi se bherne se log kitni maloomat yaad rakh paate hain jabkay onche aawaz se alfaaz ko duhrana kis hadd tak mo-asar saabit hota hai. Nataij se inkishaaf huwa ke onche aawaz mein parhna logon ko yaad rakhnay mein madad deta hai. Tahaqeeq ke nataij jareeday journal mimori mein shaya hue.

نئی زبان سیکھنا

نئی زبان لکھنا اور بولنا ذہانت اور یاداشت میں اضافے کا باعث ہوتا ہے لہٰذا اپنا اعتماد بحال رکھیں اور اپنی یادداشت کو کم ہونے سے بچائیں نئی زبان سیکھنے سے الفاظ کی سمجھ بوجھ اور مقاصد میں مدد ملتی ہے اور آپ کی سوچ الفاظ اور گرامر کی طرف ہوتی ہے اور اس سے ذہنی بہاؤ میں اضافہ ہوتا ہے۔جس سے یاداشت میں بہتری آنے لگتی ہے۔

Nai zabaan seekhna

Nai zabaan likhna aur bolna zahanat aur Yaddasht mein izafay ka baais hota hai lehaza apna aetmaad bahaal rakhen aur apni yad dasht ko kam honay se bacheen nai zabaan seekhnay se alfaaz ki samajh boojh aur maqasid mein madad millti hai aur aap ki soch alfaaz aur gramr ki taraf hoti hai aur is se zehni bahao mein izafah hota hai. Jis se Yaddasht mein behtari anay lagti hai.

ذہنی الجھاؤ کے کھیل

روزانہ اخباروں میں چھپنے والے پزل حل کرنے کی عادت ڈالیں اور سکریبل کی طرح کی کوئی گیم کھیلنے سے ذہنی استعداد میں اضافہ ہوتا ہے ہر وہ بات جو آپ کے ذہن کی صلاحیت کو ابھارےوہ آپ کی یادداشت کے نقصان کو کم کرتی ہے۔اورآپ چیزیں اور نام یاد رکھنا شروع ہو جاتے ہیں۔

Zehni uljhao ke khail

rozana akhbaron mein chupnay walay puzzle hal karne ki aadat dalain aur scribble ki tarah ki koi game khailnay se zehni istedad mein izafah hota hai har wo baat jo aap ke zehan ki salahiyat ko abhare wo aap ki yad dasht ke nuqsaan ko kam karti hai. Avraap cheeze aur naam yaad rakhna shuru ho jatay hain.

نئی کتابیں پڑھنا

اگر آپ اپنی یاداشت کو بہتر بنانا چاہتے ہیں تو کئی کتابوں کو ایک ساتھ پڑھنا شروع کردیں اور ان کا پلاٹ یاد کرنے کی کوشش کریں اس سے کوئی فرق نہیں پڑتا کہ آپ نے پڑھنے کے لئے کِس کتاب، اخبار یا رسالے کا انتخاب کیا ہے جب کبھی کام میں تعطل آئے کچھ نہ کچھ پڑھنے کی عادت ڈالیں۔

Nai kitaaben parhna

Agar aap apni Yaddasht ko behtar banana chahtay hain to kayi kitabon ko aik sath parhna shuru kar dein aur un ka plot yaad karne ki koshish karen is se koi farq nahi parta ke aap ne parhnay ke liye kِs kitaab, akhbar ya risalay ka intikhab kya hai jab kabhi kaam mein ta-attul aeye kuch na kuch parhnay ki aadat dalain.

اگر آپ کو یہ تحریر اچھی لگی ہے تو آپ کا حق بنتا ہے کہ اس پوسٹ کو سوشل میڈیا پر اپنے دوستوں کے ساتھ شیئر کریں تا کہ ان کی بھی بہتر طور پر رہنمائی ہو سکے۔

شیئر کریں